Web
Analytics
نیب کی گرفتاریوں سے متعلق وزیراعظم عمران خان کو پہلے سے کیوں معلوم ہوتا ہے، زرتاج گل نے دبنگ جواب دیکر مخالفین کا منہ بند کردیا – Lahore TV Blogs
Home / پاکستان / نیب کی گرفتاریوں سے متعلق وزیراعظم عمران خان کو پہلے سے کیوں معلوم ہوتا ہے، زرتاج گل نے دبنگ جواب دیکر مخالفین کا منہ بند کردیا

نیب کی گرفتاریوں سے متعلق وزیراعظم عمران خان کو پہلے سے کیوں معلوم ہوتا ہے، زرتاج گل نے دبنگ جواب دیکر مخالفین کا منہ بند کردیا

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) رتاج گل نے شہباز شریف کی گرفتاری کے بعد اٹھنے والے اہم سوال کا مخالفین کو جواب دے دیا۔ تفصیلات کے مطابق سابق وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف 5 اکتوبر کوتیسری مرتبہ صاف پانی کمپنی اسکینڈل میں نیب میں پیش ہوئے جہاں ان کے سامنے کیس میں حاصل کیے جانے والے ثبوت پیش کیے گئے ۔نیب کے سامنے شہباز شریف کوئی تسلی بخش جواب نہیں دے سکے۔جس کے بعد انہیں حراست میں لے لیا گیا۔ شہباز شریف کو صاف پانی اسکینڈل میں بے ضابطگیوں کے الزام میں گرفتار کیا گیا،بعد ازاں نیب کی جانب سے جاری کردہ اعلامیے میں کہا گیا کہ انہیں آشیانہ ہاوسنگ اسکیم میں بے قاعدگیوں پر گرفتار کیا گیا ہے۔ تاہم ان کی گرفتاری کے بعد سیاسی

منظر نامے پر ہلچل پیدا ہوگئی تھی ۔اس حوالے سے اس گرفتاری پر مختلف تبصرے بھی کئیے جارہے ہیں۔تحریک انصاف کے مخالفین کا یہ ماننا ہے کہ اس گرفتاری میں حکومت کا پورا پورا ہاتھ ہے۔اس حوالے سے معروف صحافی جاوید چوہدری نے انتہائی چونکا دینے والا انکشاف کرڈالا ہے۔انکا کہنا ہے کہ جب اسمبلی میں فنانس بل پیش ہورہا تھا تو وزیراعظم عمران خان باربار شہباز شریف کو دیکھ کر مسکرا رہے تھے جس کے بعد سب کو یہی کھٹکا تھا کہ کچھ بڑا ہونے والا ہے تاہم اس وقت کسی کو بھی وزیراعظم عمران خان کی مسکراہٹ کی سمجھ نہ آئی۔تاہم شہباز شریف کی گرفتاری سے سب واضح ہو گیا۔۔جاوید چوہدری اور ایسے دیگر صحافیوں نے مسلم لیگ ن کے موقف کو مضبوط کیا تاہم اس حوالے سے سیاسی جماعتوں نے یہ سوال کھڑا کرنا شروع کر دیا تھا کہ حکومت ان گرفتاریوں میں کوئی کردار نہیں رکھتی تو پھر انکو کیسے ان اہم گرفتاریوں کا علم ہوتا ہے۔تاہم تحریک انصاف کی اہم خاتون رہنما زر تاج گل نے مخالفین کی یہ پریشانی اپنے ایک ٹوئیٹ کے ذریعے حل کردی۔انکا کہنا تھا کہ نون لیگ اور پیپلز پارٹی کے معصوم لیڈرز پوچھتے ہیں کہ وزیر اعظم کو کیسے پتہ کہ آنے والے دنوں میں کافی گرفتاریاں کرپشن کے جرائم میں ہونے والی ہیں۔۔ یہ شاید بھول گئے کہ خان صاحب وزیر اعظم ہونے کے علاوہ پاکستان کے وفاقی وزیر داخلہ بھی ہیں! ایف آئی اے، آئی بی انہی کو رپورٹ کرتی ہے۔