Web
Analytics
جب تک میرے لیڈر کو رہا نہیں کیا گیا میں فیڈر سے دودھ پیتارہوں گا، نواز شریف کےجذباتی کارکن ایوب وسایا نے انوکھے احتجاج کا اعلان کردیا – Lahore TV Blogs
Home / دلچسپ و عجیب / جب تک میرے لیڈر کو رہا نہیں کیا گیا میں فیڈر سے دودھ پیتارہوں گا، نواز شریف کےجذباتی کارکن ایوب وسایا نے انوکھے احتجاج کا اعلان کردیا

جب تک میرے لیڈر کو رہا نہیں کیا گیا میں فیڈر سے دودھ پیتارہوں گا، نواز شریف کےجذباتی کارکن ایوب وسایا نے انوکھے احتجاج کا اعلان کردیا

لاہور(نیوز ڈیسک)نواز شریف کے جذباتی کارکن ایوب وسایا نے نواز شریف کی قید پر احتجاج کرتے ہوئے کہا ہے کہ جب تک میرے لیڈر نواز شریف کو رہا نہیں کیا جائے گا ، میں فیڈر سے دودھ پیتارہوں گا۔تفصیلات کے مطابق سابق وزیر اعظم نواز شریف کو گذشتہ روز احتساب عدالت کی جانب سے سزا سنائی گئی تھی جس کے بعد نواز شریف کو احاطہ عدالت سے گرفتار کر کے اڈیالہ جیل منتقل کر دیا گیا تھا۔تاہم سابق وزیر اعظم کی جانب سے کوٹ لکھپت جیل میں سزا کاٹنے کی درخواست قبول کر لی گئی اور انکو ایک رات اڈیالہ جیل میں رکھ کر صبح بذریعہ پرواز لاہور بھیج دیا گیا ہے۔ اس موقع پر جیل کے باہر کارکنوں کی نہایت مایوس کُن تعداد موجود تھی جبکہ مسلم لیگ ن پنجاب کا کوئی

بڑا نام بھی جیل کے باہر موجود نہیں تھا۔کارکنان نے جیل کے باہر نعرے بازی کی اور پولیس کے ساتھ ہاتھا پائی بھی کی۔لیکن کسی بڑے پارٹی رہنما نے پارٹی قائد کی کوٹ لکھپت جیل آمد کے موقع پر ان کا استقبال کرنے کی زحمت نہیں کی۔ دوسری جانب پنجاب حکومت نے نواز شریف کی درخواست منظور کرتے ہوئے انہیں جیل میں بی کلاس فراہم کرنے کے احکامات جاری کر دئے تھے۔دوسری جانب کارکنان کی جانب سے شدید احتجاج کا مظاہرہ کیا جارہا ہے۔ایسا ہی ایک جذباتی کارکن ایوب وسایا خود کو زنجیروں میں جکڑ کر احتجاج کرنے پہنچ گیا۔اس نے سینے پر نواز شریف اور شہباز شریف کی تصویریں چسپاں کر رکھی ہیں جبکہ اس کے ایک ہاتھ میں فیڈر بھی موجود ہے ۔ایوب بھٹہ وسایا کا کہنا تھا کہ میں مسلم لیگ ن کا کارکن ہوں ۔میں نواز شریف اور شہباز شریف کا ادنیٰ سپاہی ہوں ۔میرا جینا مرنا مسلم لیگ ن اور شہباز شریف اور نواز شریف کے ساتھ ہے۔میں تب تک اس فیڈر سے دودھ پیتا رہوں گا جب تک میرے لیڈر میاں محمد نواز شریف اور شہباز شریف کو رہا نہیں کر دیا جاتا۔یاد رہے کہ اس سے پہلے بھی ایوب وسایا نواز شریف سے ہاتھ ملانے کے چکر میں سیکیورٹی گارڈز کے ہاتھوں مار کھا چکا ہے۔