Web
Analytics
پاکستان شوبز انڈسٹری کرائسٹ چرچ حملے پر رنجیدہ، سوشل میڈیا پر اپنے جذبات کا اظہار کن الفاظ میں کیا، جانئے – Lahore TV Blogs
Home / شوبز / پاکستان شوبز انڈسٹری کرائسٹ چرچ حملے پر رنجیدہ، سوشل میڈیا پر اپنے جذبات کا اظہار کن الفاظ میں کیا، جانئے

پاکستان شوبز انڈسٹری کرائسٹ چرچ حملے پر رنجیدہ، سوشل میڈیا پر اپنے جذبات کا اظہار کن الفاظ میں کیا، جانئے

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک)نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ کی دو مساجد پر دہشتگرد حملے میں 2 پاکستانیوں سمیت 50 افراد کی شہادت پر ہرکوئی افسردہ ہے۔پاکستان شو بز انڈسٹری اور دیگر شعبوں سے تعلق رکھنے والی نمایاں شخصیات نے بھی افسوسناک واقعے پر سوشل میڈیا کے ذریعے اپنے جذبات کا اظہارکیا ۔اداکار شان شاہد نے لکھا کہ عیسائیت دہشتگردی کی تعلیمات نہیں دیتی، عیسائیت کے نام پر چند بیمارذہن دہشتگردی کی کارروائی کرتے ہیں۔ ذمہ دار کو سزا ملنی چاہیئے۔اداکارہ ارمینا رانا خان نے لکھا کہ اس واقعے کی لائیو ویڈیو ایسے بنائی گئی جیسے کوئی ویڈیو گیم کھیل رہا ہو۔ارمینا نے برطانوی نشریاتی ادارے کی سرخی پر تنقید کرتے ہوئے لکھا کہ یہ لوگ مرے نہیں بلکہ انہیں

خون میں نہلایا گیا۔ دہشتگردی صرف مسلمانوں کیلئے مخصوص نہیں ، آپ کو اپنے الفاظ درست کرنے کی ضرورت ہے۔ماہرہ خان نے واقعے پرافسوس کا اظہار کرتے ہوئے متاثرہ لوگوں کے لیے دعا کی۔گلوکارعلی ظفر نے فائرنگ کی ویڈیو کو اب تک کی سب سے زیادہ افسوسناک ویڈیو قرار دیتے ہوئے سوال اٹھایا کہ حیرت زدہ ہوں دنیا اسے پرتشدد کارروائی کہے گی یا دہشتگردی؟ ۔اداکار اور میزبان فہد مصطفیٰ نے اظہار افسوس کرتے ہوئے ایسے لوگوں کیلئے ہدایت کی دعا کی۔قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان وسیم اکرم کی اہلیہ شنیرا اکرم نے ٹوئٹر پر لکھا کہ دہشتگردی کا کوئی رنگ، مذہب یا ملک نہیں۔ یہ تیزی سے بڑھتی ہوئی قاتلانہ بیماری ہے جو اس جزیرے کے چھوٹے لوگوں کے دماغوں میں پھیل رہی ہے۔ دہشتگردی انسانیت کیلئے موذی مرض کینسر جیسی ہے۔گلوکار فخرعالم نے بھی واقعے پر شدید صدمے کا اظہار کرتے ہوئے متاثرہ لوگوں سے اظہار یکجہتی کیا۔سابق کرکٹر رمیز راجہ نے واقعے میں بنگلہ دیش کرکٹ ٹیم کے کھلاڑیوں کے محفوظ رہنے پر شکرادا کیا۔شاہد آفریدی نے نیوزی لینڈ کوسب سے زیادہ محفوظ ، پرامن ملک اور وہاں کے لوگوں کے مزاج کو دوستانہ قرار دیتے ہوئے لکھا کہ دنیا کو متحد ہونا چاہیئے، نفرتیں ختم کریں۔ دہشتگردی کا کوئی مذہب نہیں۔اداکار فیصل قریشی نے بھی واقعے کی شدید مذمت کی۔اداکارہ ماورہ حسین نے اپنی ٹویٹ میں ایک دوسرے کیلئے پیار، امن اور برداشت پیدا کرنے کیلئے کہا۔ انہوں نے لکھا کہ عبادت کی جگہ پر حملہ کرنے والے کا تعلق کسی بھی مذہب سے کیسے ہوسکتا ہے۔اداکار فیروز خان نے بھی دہشتگردی کو لامذہب قرار دیتے ہوئے متاثرہ افراد سے اظہار یکجہتی کیا۔ادکار عثمان خالد بٹ نے بھی متاثرہ افراد کیلئے دعائیہ کلمات کہے۔ کہ وہاں موجود بنگلادیش کرکٹ ٹیم کے کھلاڑی بال بال بچے، جو بعد ازاں دورہ منسوخ کر کے وطن واپس روانہ ہوگئے۔